ماڈل گرل رباب شفیق کی قبر کشائی کا عدالتی حکم

کراچی: ماڈل گرل رباب شفیق کی ہلاکت کا نوٹس لیتے ہوئے عدالت نے مقتولہ کی قبر کشائی کا حکم دے دیا ہے

میڈیا رپورٹس کے مطابق فروری کے مہینے میں ماڈل گرل کی لاش کراچی کے علاقے موچکو سے ملی تھی مزید تفتیش کرنے پر معلوم ہوا تھا مقتولہ کی موت اسقاط حمل کے دوران غلط انجیکشن لگنے کی وجہ سے ہوئی۔

اس الزام میں پولیس نے تین لوگوں کو گرفتار کرلیا جن میں ہسپتال کی نرس ، ڈسپنسر اور مقتولہ کا دوست شامل ہے

پولیس تفتیش کے دوران معلوم ہوا ہے کہ مقتولہ کے دوست نے نرس کو زبردستی اسقاط حمل کا کہا جس کی وجہ سے مقتولہ کی موت واقع ہو گی

یاد رہے بائیس فروری کو ماڈل گرل کی لاش کراچی کے علاقے موچکو سے ملی تھی مقدمہ کا مرکزی ملزم عمر ضمانت پر رہا ہے

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
loading...

Related Articles