پاکستانی پائلٹس کے مشکوک لائسنس ، یورپی یونین ایئر سیفٹی ریگولیشن نے اہم ٹیلی کانفرنس طلب کر لی


اسلام آباد : یورپی یونین ایئر سیفٹی ریگولیشن نے پاکستا نی پائلٹس کے مشکوک لائسنس کے معاملے پر اہم ٹیلی کانفرنس طلب کر لی، جس میں سی اے اے سے پائلٹوں اور فضائی میزبانوں کو جاری ہونے والے لائسنس کی تفصیلات طلب کی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستا نی پائلٹس کے مشکوک لائسنس کے معاملے پر یورپی یونین ایئر سیفٹی ریگولیشن نے پاکستانی سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ساتھ اہم ٹیلی کانفرنس طلب کر لی ، ٹیلی کانفرنس برسلز بیلجیئم میں ہوگی۔

کانفرنس کی پوری کاروائی آن لائن کرائی جائے گی، یہ اقدام کوویڈ19 کے پیش نظر اٹھا یا گیا ہے ، کانفرنس میں پائلٹس کے لائسنس کے اہم ایشو پر بات کی جائے گی۔

پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل، ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل، ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل ریگولیٹری،ڈائریکٹر ایئر وردی نیس اور ڈائریکٹر فلائٹ اسٹیندرڈ ویڈیو لنک کے ذریعے ٹیلی کانفرنس میں شر کت کریں گے۔

برسلز میں اجلاس کی سربراہی یورپی یونین ایئر سیفٹی ریگولیشن کے فلپ کورنیلس کریں گے، اجلاس 9 جولائی پاکستانی وقت کے مطابق دن ایک بجے شروع ہوگا ۔

اجلاس میں یورپی یونین ایئر سیفٹی ریگولیشن نے سول ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے پائلٹوں اور فضائی میزبانوں کو جاری ہونے والے لائسنس کی تفصیلات بھی طلب کی ہیں۔

اجلاس کے ایجنڈے میں سول ایوی ایشن کی جانب سے لائسنس کے اجراء کا طریقہ کار پر بھی وضاحت مانگی گئی ہے جبکہ 21 جولائی تک جاری ہونے والے سول ایوی ایشن اتھارٹی کے لائسنس کی تفصیلات بھی طلب کر لی ہیں۔

fb-share-icon0

Tweet
20

Comments

comments



سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
loading...

Related Articles