وفاقی کابینہ کااجلاس جاری، پائلٹس کے مشکوک لائسنس کی منسوخی کا فیصلہ متوقع


اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں پائلٹس کے جعلی و مشکوک لائسنسز کی منسوخی کا فیصلہ آج کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کااجلاس جاری ہے، کابینہ 16 نکاتی ایجنڈے سمیت ملکی سیاسی، معاشی اورکورونا وباء کے باعث پیدا صورتحال پر غور کیا جارہا ہے۔

سول ایوی ایشن حکام مشکوک پائلٹس کے معاملہ پر تفصیلی بریفنگ دیں گے ، جس کے بعد کابینہ پائلٹس کے جعلی و مشکوک لائسنسز کی منسوخی کا فیصلہ کرے گی۔

کابینہ اجلاس میں 2 جولائی کو نجکاری کمیٹی کے اجلاس کے فیصلوں کی توثیق کی جائے گی اور وزارت قانون کی اجازت کےبغیرایف بی آرکووکیل کرنےکی اجازت کی تجویز پرغور ہوگا۔

مزید پڑھیں : جعلی لائسنس کے حامل پائلٹس کیخلاف کارروائی کیلیے سمری طلب

اجلاس میں جی 12 ،ایف12 کی زمین فیڈرل ایمپلائزہاؤسنگ اتھارٹی کو دینے کا جائزہ لیا جائےگا اور یف اےٹی ایف سےمتعلق کمپنیز ایکٹ 2017 میں مجوزہ ترامیم پربریفنگ دی جائے گی جبکہ کابینہ قیدی سید شارق رضا کو برطانیہ حوالگی کا فیصلہ کرے گی۔

ایگروفوڈ پروسیسنگ فیسیلیٹز ملتان کےسی ای او کی تقرری ، نادرااور انٹرنیشنل آرگنائزیشن آف مائیگرینٹس میں معاہدوں کی منظوری اور ایس ٹی ای ڈی ای سی کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے 3ارکان کی تقرری بھی ایجنڈے کا حصہ ہیں۔

یاد رہے گذشتہ اجلاس میں پوفاقی کابینہ نے جعلی لائسنس و ڈگری کے حامل پائلٹس کے خلاف کارروائی کے لیے تفصیلی سمری دوبارہ طلب کر لی تھی، ارکان نے رائے دی تھی کہ پائلٹس کےلائسنس منسوخی سےمتعلق معاملہ پیچیدہ ہے، پائلٹس کی ڈگری کامعاملہ مس ہینڈل کیاگیا۔ لائسنس منسوخی کامعاملہ پراسس میں ڈال دیا گیا لیکن مزید حقائق دیکھناہوں گے۔

fb-share-icon0

Tweet
20

Comments

comments



سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں
loading...

Related Articles